تعارف

ماہ نامہ ‘ھادیہ’ ای-میگزین جدید تقاضوں کے پیش نظر، اس امید کے ساتھ کہ یہ خواتین میں فکر وعمل کے لیے راہ ہموار کرے گا، انہیں دور جدید سے ھم آہنگ کرے گا اور خواتین کی صلاحیتوں کو جلا بخشنے کا ذریعہ ثابت ہو گا۔
ھادیہ:
لفظ ‘ھدایت’ کے معنیٰ راستہ دکھانا اور راستے پر چلانا ہے _ اسی سے اسم فاعل برائے تانیث لفظ ‘ھادیہ’ ہے، یعنی راستہ دکھانے والی، رہ نمائی کرنے والی _
لفظ ‘ھادیہ’ میگزین کے مقاصد کا ترجمان ہے _ اس لیے اسے میگزین کے نام کے لیے منتخب کیا گیاہے۔ چوں کہ یہ ماہانہ میگزین ہے اورای میگزین ہے، اس لیے اس کا نام ‘ماہ نامہ ھادیہ ای میگزین’ رہے گا۔ تعلیم، تدبیر، تعمیر اس میگزین کی اساس ہے۔
خواتین کے طبع زاد تحریری مضامین کے ساتھ podcast بھی رہے گا۔
ھادیہ کے مشمولات میں اخلاقی، سیاسی و نظریاتی، فکری مضامین، صحت و صلاح ٹیکنالوجی، قران وحدیث، ادب، تربیت اولاد، شخصیت و نفسیات، آرٹس اور کلچر بھی شامل ہے۔
صحافتی دنیا میں خواتین کے مسائل زیر بحث لانا، اسلام اور مسلم سماج پر اٹھنے والے اعتراضات سے مسلم خواتین کو متاثر ہونے سے بچانا اور دیگر امور پر رہ نمائی فراہم کرنا اس کے اہم مقاصد ہیں_

یہ ان شاء اللہ اپنے قارئین کو ان کا مقصدِ زندگی سمجھانے میں مددگار ثابت ہوگا۔
‘ھادیہ’ ای-میگزین کے پیش نظر اردو قارئین کوروایتی طرزِ فکر کے علی الرغم نئی جہت اور نئے آئیڈیاز پر سوچنے کے لیے آمادہ کرنا ہے ۔
ھادیہ کا پہلا شمارہ (مارچ 2021) علامہ اقبال کے اس مصرع کے عنوان کے ساتھ منظر عام پر آیا ہے :
” اٹھ کہ اب بزمِ جہاں کا اور ہی انداز ہے ۔”

ھادیہ کا مقصد دورِ جدید میں خواتین سے متعلق تبدیل ہوتے سوچ کے زاویوں اور میدان عمل میں اترنے والی خواتین کے مسائل کا حل خواتین قلم کار کے ذریعہ فراہم کرنا ہے _ ساتھ ہی اس میں صنفی تفریق ، خواتین امپاورمنٹ، قدامت پرستی، نئی دنیا کے چلینجیز جیسے موضوعات زیر بحث لائے جائیں گے۔
یہ میگزین ان شاء اللہ زندگی کے ہر شعبے میں پورے اعتماد کے ساتھ خواتین رائیٹرز کے ذریعہ خاندان کی رہ نمائی کرتا ہوا نظر آئے گا _

اللہ کا شکر و احسان ہے کہ ھادیہ جن نفوس کی تحریک پر معرض وجود میں آیا ان کی کاوشیں خواتین کی بیداری پر شاہد و گواہ ہیں –

ھادیہ کی قلم کار پرجوش، دانش مند اور بصیرت مند خواتین کی ٹیم اس کے مقاصد سے روحانی و شعوری اعتبار سے وابستہ ہے۔

اس کی مجلس ادارت میں چیف ایڈیٹر محترمہ عطیہ صدیقہ ، ایڈیٹر مبشرہ فردوس، اسسٹنٹ ایڈیٹر آسیہ تنویر صاحبہ. اور مجلس ادارت میں فاطمہ تنویر صاحبہ، تسنیم فرزانہ صاحبہ نازنین سعادت صاحبہ اور بشری ناہید صاحبہ، مولانا محمد رضی الاسلام ندوی اور برادر مصدق مبین شامل ہیں ۔