راہ انقلاب
وقت کے دریچوں سے روشنی سی آتی ہے
وقت کے دریچوں سے روشنی سی آتی ہے
برف کی چٹانوں پر صبح جھلملاتی ہے
شام مسکراتی ہے رات جگمگاتی ہے
آغا حشر کاشمیری کی نظم
محبہ جلیل کی آواز میں سماعت فرمائیں جس کا عنوان ہے راہ انقلاب
مکمل نظم سننے کے لیے نیچے کلک کریں۔

ویڈیو :

0 Comments

Submit a Comment

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

نومبر ٢٠٢١